Header Ads

Breaking News
recent

برطانوی سفیر کا قبولِ اسلام اور حج کی سعادت

برطانوی سفیر سائمن کولِس نے اسلام قبول کرنے کے بعد سعودی عرب کے شہر مکہ میں حج ادا کیا ہے۔ سائمن نے انپی اہلیہ ہدا موجارکیچ کے ہمراہ حج ادا کیا۔ حج کی ادائیگی مالی استطاعت رکھنے والے ہر مسلمان پر زندگی میں ایک بار فرض ہوتی ہے۔  ان کی تصویر سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر سعودی مصنف اور خاتون سماجی کارکن فوزیہ البکر نے اپنے پیغام میں لکھا کہ سائمن کولس نے اپنی اہلیہ ہدا کے ساتھ حج کیا اور ’وہ حج ادا کرنے والے پہلے برطانوی سفیر ہیں۔‘ برطانوی سفیر کو حج کی ادائیگی پر مبارکباد دینے والے ٹوئٹر صارفین میں سعودی شہزادی بسمہ بنت سعود بھی شامل ہیں۔
لوگوں کی جانب سے نیک خواہشات اور مبارکباد کے جواب میں برطانوی سفیر نے لکھا’ مختصراً یہ کہ میں نے 30 سال مسلمان معاشروں میں رہنے اور ہدا سے شادی کرنے سے پہلے اسلام قبول کر لیا ہے۔‘ خیال رہے کہ برطانوی سفیر سائمن کالِس سنہ 2015 سے سعودی عرب میں تعینات ہیں۔ وہ وزارتِ خارجہ کی جانب سے شام، عراق اور قطر میں بھی سفیر سمیت مختلف عہدوں پر کام کرتے رہے ہیں۔ سنہ 2012 میں انھیں شام سے اس وقت سکیورٹی خدشات کی بنا پر ملک واپس بلوا لیا گیا تھا جب انھوں نے کھلم کھلا صدر بشارالاسد کی حکومت کے شامی خانہ جنگ میں کردار پر سوال اٹھایا تھا۔ انھوں نے تیونس، دہلی اور عمان میں بھی برطانوی قونصل جنرل کی حیثیت سے فرائض سرانجام دیے۔

No comments:

Powered by Blogger.